بے چاری سنیتھا رچی کہیں کی نہ رہی ۔۔۔ الزامات کو کہانی قرار دے کر مسترد کردیا گیا

بے چاری سنیتھا رچی کہیں کی نہ رہی ۔۔۔ الزامات کو کہانی قرار دے کر مسترد کردیا گیا

کراچی (ویب ڈیسک) سنتھیا رچی کیس، پولیس نے رحمان ملک اور یوسف رضا گیلانی پر عائد الزامات مسترد کردیئے،اسلام آباد پولیس کے مطابق سنتھیا رچی نے کسی بھی قسم کے شواہد یا ثبوت پیش نہیں کیے گئے،جب کہ پولیس نے عدالت میں تفصیلی رپورٹ جمع کرادی ہے۔ تفصیلات کے مطابق، اسلام آباد پولیس نے” “” “

ایک بار پھر سنتھیا رچی کی جانب سے سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی اور سینیٹر رحمان ملک پر عائد الزامات مسترد کردیئے ہیں۔پولیس نے الزامات کو بےبنیاد قرار دیا ہے۔ پولیس نے عدالت سے استدعا کی کہ سنھتیا رچی کی درخواست کو خارج کردیا جائے۔ اسلام آباد پولیس کے ایس پی نے ایڈیشنل سیشن جج اسلام آباد کی عدالت میں تفصیلی رپورٹ جمع کراتے ہوئے کہا کہ سنتھیا رشی اپنے الزامات کی تائید میں کسی بھی قسم کے شواہد یا ثبوت پیش کرنے میں ناکام ہوگئی ہیں۔پولیس کا یہ بھی کہنا تھا کہ سنتھیا کی جانب سے یہ الزام بھی عائد کیا گیا تھا کہ انہیں سوشل میڈیا اور واٹس ایپ پر پیپلز پارٹی کارکنان نے دھمکیاں دی ہیں مگر اس حوالے سے انہوں نے نا ہی کوئی نمبر فراہم کیا اور نا ہی کوئی پیغام دکھایا۔ جب کہ یہ جرائم سائبر کرائم کے زمرے میں آتے ہیں جو کہ ایف آئی اے کا دائرہ اختیار ہے۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی قیادت کے درمیان اپوزیشن جماعتوں پر مشتمل اتحاد قائم کرنے پر اتفاق ہوگیا ہے پیپلز پارٹی کے ذرائع کے مطابق اتحاد کے نام اور عہدیداروں کا فیصلہ اے پی سی کے دوران کیا جائے گا. پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو لاہور میں چار روز قیام کے بعد براستہ موٹروے اسلام اآباد روانہ ہو گئے۔وہ عید کے بعد دوبارہ لاہور آئیں گے ۔ ان کی لاہور آمد کا مقصد مسلم لیگ ن کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف سے اے پی سی کے بارے میں مشاورت اور ایجنڈا پر تبادلہ خیال کرنا تھا.دونوں رہنماؤں میں ٹیلی فونک رابطہ ہوا تاہم شہباز شریف کی بیماری کی وجہ سے براہ راست ملاقات نہ ہو سکی. ٹیلی فونک رابطے کے اگلے دن مسلم لیگ ن کا تین رکنی اعلیٰ سطحی وفد خیر سگالی کے طور پر بلاول ہاؤس پہنچا اور اے پی سی کے بارے میں مشاورت اور تفصیلی تبادلہ خیال کیا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں