’’یہ میرا آخری ویڈیو ہے، میں پچھلے چار مہینوں سے۔۔‘‘ سیاسی جماعت کے کارکنوں کی دھمکیوں سے تنگ آکر اداکارہ نے انتہائی قدم اٹھالیا

’’یہ میرا آخری ویڈیو ہے، میں پچھلے چار مہینوں سے۔۔‘‘ سیاسی جماعت کے کارکنوں کی دھمکیوں سے تنگ آکر اداکارہ نے انتہائی قدم اٹھالیا

نئی دہلی (ویب ڈیسک) تامل فلموں کی مشہور اداکارہ وجایا لکشمی نے ایک سیاسی جماعت کے کارکنوں کی دھمکیوں سے تنگ آکر زہریلی گولیاں کھالیں۔ وجایا لکشمی نے اتوار کے روز فیس بک پر کئی ویڈیوز پوسٹ کیں جن میں انہوں نے الزام عائد کیا کہ نام تھامیزار پارٹی کے” “” “

لیڈر سیمن اور پناکٹو انہیں ہراساں کر رہے ہیں۔ انہوں نے اپنی ایک ویڈیو میں کہا کہ انہوں نے زہریلی گولیاں کھالی ہیں جس سے پہلے ان کا بلڈ پریشر کم ہوگا اور اس کے بعد موت واقع ہوجائے گی۔ وجایا لکشمی نے اپنی ویڈیوز میں بتایا کہ مذکورہ بالا سیاسی رہنماؤں اور ان کے کارکنوں کی مسلسل ہراسانی سے تنگ آکر وہ یہ انتہائی قدم اٹھا رہی ہیں۔ دی ٹائمس آف انڈیا کی ایک خبر کے مطابق، وجیا لکشمی نے فیس بک پر ایک ویڈیو پوسٹ میں کہا’’ یہ میرا آخری ویڈیو ہے۔ میں پچھلے چار مہینوں سے سیمان اور اس کی پارٹی کے لوگوں کی وجہ سے بہت زیادہ تناو میں ہوں۔ میں نے بہت کوشش کی کہ میں اپنے کنبہ کے لئے زندہ رہنے کی کوشش کروں لیکن ایسا نہیں ہو پا رہا ہے۔ میری ہری نادر نے میڈیا میں بہت زیادہ توہین کی ہے۔ میں نے بلڈ پریشر کی گولیاں کھا لی ہیں۔ کچھ وقت میں میرا بلڈ پریشر بہت کم ہو جائے گا اور میری موت ہو جائے گی۔ میری موت لوگوں کے لئے ایک مثال ہونی چاہئے اور انہوں نے اپنے مداحوں سے اپیل کی کہ سیمان اور ہری نادر جیسے لوگوں کو بخشا نہ جائے اور ان کا ذہنی استحصال کرنے کے لئے لوگوں کو سخت سے سخت سزا ملے‘‘۔

اپنا تبصرہ بھیجیں