سب کی باری آگئی!! ڈاکٹر ظفر مرزا کے مستعفی ہونے کے بعد کن اہم شخصیات کو فارغ کئے جانے کا امکان ہے؟ تفصیلات سامنے آگئیں

سب کی باری آگئی!! ڈاکٹر ظفر مرزا کے مستعفی ہونے کے بعد کن اہم شخصیات کو فارغ کئے جانے کا امکان ہے؟ تفصیلات سامنے آگئیں

اسلام آباد (ویب ڈیسک) سابق معاون خصوصی ڈاکٹر ظفر مرزا کے استعفیٰ کے بعد یہ مشیرا ور کنسلٹنٹ دفتر نہیں آرہے ہیں ، ڈاکٹر ظفر مرزا نے وزارت کے مختلف امور پرمشاورت اور نگرانی کیلئے سترہ کنسلٹنٹ و مشیر وں کا تقرر کیا تھا جن میں ڈاکٹر اسرار الحق ، ڈاکٹر طاہر جاوید ،

کرم شاہ ، جواد رانا، ڈاکٹر عثمان مشتاق ، سلطان غنی، ایاز کیانی، عمیر صدیقی ، فہدقیصرانی،ڈاکٹر رضا زیدی، ڈاکٹر احسان احمد ،ڈاکٹر حسن محمود ، ڈاکٹر بسما ، ڈاکٹر عائشہ ، عزیز ، لبنیٰ یعقوب شامل تھے ، ڈاکٹر ظفرمرزا کے استعفیٰ کے بعد مذکورہ کنسلٹنٹ و مشیروں نے وزارت میں اپنے دفاتر آنا چھوڑ دیا اور کام روک دیا ہے ، معاون خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان کی جانب سے تاحال کسی مشیر و کنسلٹنٹ کو برقرار رکھنے کی ہدایت نہیں دی گئی ۔ دوسری جانب تانیہ ایدروس نے ڈیجیٹل پاکستان فاؤنڈیشن کے نام سے این جی او بنائی جسے سیکیورٹی اینڈ ایکسچینج کمیشن پاکستان (ایس ای سی پی) میں رجسٹرڈ کرایا گیا جب کہ این جی او کے ڈائریکٹرز میں جہانگیر ترین اور تانیہ ایدروس شامل تھے۔ ذرائع کا کہنا ہےکہ فاؤنڈیشن کی فنڈنگ میں بے قاعدگیوں کے بھی الزامات سامنے آئے جس پر وزیراعظم عمران خان نے معاملے کی تحقیقات کا حکم دیا اور تحقیقات کے دوران تانیہ ایدروس الزامات سے بری الزمہ نہ ہو سکیں۔ ذرائع نے بتایا کہ پاکستان کو ڈیجیٹل بنانے کا منصوبہ تانیہ ایدروس کی این جی او کو ملا اور تانیہ کی تہری شہریت پر بھی کئی حلقوں کو تحفظات تھے۔ ذرائع کے مطابق تانیہ ایدروس پاکستان کے علاوہ کینیڈا اور سنگاپور کی شہریت بھی رکھتی ہیں۔ واضح رہے کہ وزیراعظم کے معاونین خصوصی تانیہ ایدروس اور ظفر مرزا نے گزشتہ روز استعفے دیے جن میں انہوں نے اپنی دہری شہریت پر تنقید کو استعفے کی وجہ بتایا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں