ڈاکٹر ماہا کے کیس میں ڈرامائی موڑ ۔۔

ڈاکٹر ماہا کے کیس میں ڈرامائی موڑ ۔۔

کراچی (ویب ڈیسک) ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی (ڈی ایچ اے) کراچی میں اپنے گھر میں مبینہ طور پر خود موت کو سینے سے لگانے والی ڈاکٹر ماہا شاہ کی میڈیکو لیگل رپورٹ میں اس کو کسی دوسرے شخص کی جانب سے زندگی سے محروم کیے جانے کا امکان سامنے آگیا ہے، رپورٹ کے مطابق

ڈاکٹر ماہا رائٹ ہینڈر تھی جبکہ ڈاکٹر ماہا کے سر میں بائیں جانب سے زخم کا نشان پایا گیا تھا ۔ ڈاکٹر ماہا کی موت 18 گست کو ڈی ایچ اے کراچی میں واقع گھر میں ہوئی تھی۔یہ شبہ ڈاکٹر ماہا کی میڈیکو لیگل رپورٹ کے بعد سامنے آیا ہے ۔تفتیشی حکام اور ڈاکٹر ماہا کے والد کا کہنا ہے کہ مرحومہ رائٹ ہینڈر تھیں، جبکہ کرائم سین اور اہلخانہ کے بیان کے مطابق بلٹ کنپٹی کے سیدھے ہاتھ کی جانب سے لگی ۔ایس ایس پی انویسٹی گیشن ساؤتھ زون بشیر بروہی کا کہنا ہے کہ میڈیکو لیگل رپورٹ کے بعد ہی ڈاکٹر ماہا کی قبر کشائی کا مجسٹریٹ کو لکھا گیا تاکہ تفصیلی میڈیکل اگزامینیشن سے صورتحال واضح ہو اور اگر یہ مرڈر ہے تو ڈاکٹر ماہا کے اہلخانہ کو بھی شامل تفتیش کیا جاسکتا ہے۔میڈیکو لیگل رپورٹ کے بارے میں ڈاکٹر ماہا کے والد کا کہنا ہے کہ رپورٹ میں گڑ بڑ کی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں