سعودی عرب اور ترکی کے درمیان کشیدگی! سعودی حکومت نے اپنے شہریوں سے کیا اپیل کر دی؟ ایک اور تنازعہ کھڑا ہونے کو تیار

سعودی عرب اور ترکی کے درمیان کشیدگی! سعودی حکومت نے اپنے شہریوں سے کیا اپیل کر دی؟ ایک اور تنازعہ کھڑا ہونے کو تیار

ریاض (نیوز ڈیسک)سعودی عرب نے اپنے شہریوں سے ترک اشیا کے بائیکاٹ کی اپیل کردی ہے۔تفصیلات کے مطابق ترک صدر طیب اردوان اسرائیل کے ساتھ امن معاہدے اور سعودی صحافی کے ق ت ل سے متعلق موقف پر ڈٹے ہوئے ہیں ، ترک صدر کے حالیہ بیان پر سعودی عرب بھی میدان میں آگیا ہے اور اپنے

شہریوں سے اپیل کی ہے کہ ترک مصنوعات کا بائیکاٹ کیا جائے۔ٹویٹر پر سعودی چیمبر آف کامرس کے سربراہ عجلان العجلان نے لکھا کہ ہماری قیادت، ملک اور شہریوں کے خلاف ترک حکومت کے جارحانہ اور عداوت سے بھرے بیانات کے جواب میں درآمد کردہ ترک اشیا، سرمایہ کاری یا سیاحت، ہر سطح پر سعودی صارف کی ذمہ داری بنتی ہے کہ مکمل بائیکاٹ کریں۔

روئٹرز کے مطابق ترک صدر طیب اردوان نے اقوام متحدہ میں تقریر اور حالیہ بیان میں اسرائیل کے ساتھ تعلقات بڑھانے پر عرب ممالک پر تنقید کی تھی اورسعودی صحافی کے ق ت ل پر بھی سعودی حکام کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا، 2 اکتوبر 2018 کو ترکی کے شہر استنبول میں سعودی قونصل خانے میں جلاوطن صحافی کو ق ت ل کردیا گیا تھا جس کے بعد سعودی عرب اور ترکی کے درمیان کشیدگی بڑھ گئی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں