حیران کن انکشاف : (ن) لیگی رہنماؤں پر بغاوت کی ایف آئی آر کاٹنے والا تھانیداراچانک کہاں غائب ہو گیا ؟تازہ ترین اطلاعات

حیران کن انکشاف : (ن) لیگی رہنماؤں پر بغاوت کی ایف آئی آر کاٹنے والا تھانیداراچانک کہاں غائب ہو گیا ؟تازہ ترین اطلاعات

لاہور (ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن کے قائد نوازشریف اور مریم نوازکے ترجمان محمد زبیر بغاوت کے مقدمے میں گرفتاری دینے کیلئے تھانہ شاہدرہ میں پیش ہوگئے۔ انہوں نے کہا کوئی بھی مقدمے کی ذمہ داری لینے کو تیار نہیں، عمران خان نے ایف آئی آر کیلئے براہ راست آرڈر کئے، جتنے مرضی

مقدمات بنائیں، ن لیگ کے ورکرز باہر ضرور آئیں گے۔سابق گورنر سندھ و لیگی رہنما محمد زبیر اور عطاتارڑ نے ایس ایچ او تھانہ شاہدرہ سے ملاقات کی اور لیگی رہنماؤں نے اپنے خلاف مقدمہ کے حوالے سے بات چیت کی۔ محمد زبیر نے کہا سابق گورنر رہ چکا ہوں، حکومتی آشیرباد کے بغیر مقدمہ درج نہیں ہوسکتا۔ ایس ایچ او تھانہ شاہدرہ نے جواب دیا کہ ہمارے پاس درخواست آئی، ہم نے مقدمہ درج کیا، پولیس میرٹ پر تفتیش کرے گی، تعیناتی کو 2 روز ہوئے، مجھ سے پہلے مقدمہ درج ہوا۔محمد زبیر نے کہا یہ پہلا مقدمہ ہے جس میں ملزمان خود تھانے آئے ہیں، ہمارے آنے سے پہلے تفتیشی افسر غائب ہوگیا، نواز شریف نے ملکی مسائل پر تقریر کی تھی، تقریر کرنے پر وزیراعظم نے بغاوت کا مقدمہ بنا دیا،، ہم ایس ایچ او یا وزیراعلیٰ پنجاب کو الزام دینے نہیں آئے، عمران خان نے مقدمے بنانے کی براہ راست ہدایات دی ہیں، وزیراعظم کو ہمارے خلاف مقدمات درج کرنے کا شوق ہے۔لیگی رہنما کا کہنا تھا ہم پر اداروں کیخلاف بات کرنے کا الزام لگایا جاتا ہے، نواز شریف نے سلیوٹ کر کے کہا فوج کے ہر جوان کی عزت کرتے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق غداری کا مقدمہ درج کرنے والا ایس ایچ او زاہد رندھاوا لمبی چھٹی پر چلا گیا۔قائم مقام ایس ایچ او نے لیگی رہنماؤں سے ملاقات کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں