کورونا میں مبتلا بچن خاندان کے لیے شاہد آفریدی کا پیغام

کورونا وائرس کا شکار سئینربھارتی اداکار امیتابھ بچن اور ان کے بیٹے ابھیشیک بچن کے لئے سابق پاکستانی فاسٹ باؤلر شعیب اختر اور شاہد آفریدی نے جلد صحتیاب کے لیے دعا ئیہ پیغامات جاری کئے۔

باغی ٹی وی :بالی وڈ اداکار امیتابھ بچن نے گزشتہ روز سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کورونا وائرس کا شکار ہونے کی تصدیق کی تھی۔اُنہوں نے بتایا تھا کہ اُن کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے اور اُنہیں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جبکہ اس حوالے سے متعلقہ حکام کو بھی آگاہ کردیا گیا ہے۔

دوسری جانب ابھیشیک بچن نے بھی اپنے ٹوئٹر پیغام میں بتایا کہ اُن کا اور اُن کے والد امیتابھ بچن کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے۔ابھیشیک نے کہا تھا کہآج میرے والد اور مجھ میں کووٖیڈ 19 کا ٹیسٹ مثبت آیا ہم دونوں میں معمولی علامات کے بعد ہسپتال میں داخل ہوئے میں سب سے درخواست کرتا ہوں کہ پرسکون رہیں اور پریشان مت ہوں-

انہوں نے کہا کہ وہ تمام افراد جو گزشتہ 10 دن کے دوران ان کے قریب رہے وہ تمام افراد بھی اپنے ٹیسٹ کرالیں-

امیتابھ بچن اور ابھیشیک بچن کے ان ٹوئٹس کے سامنے آنے پر جہاں ان کے مداحوں نے بھارتی فنکاروں نے بھی سوشل میڈیا پر ان کی جلد صحتیابی کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا وہیں پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کھلاڑی شعیب اختر اور سابق کپتان شاہد آفریدی نے بھی دُعائیہ پیغامات جاری کئے-

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹرشعیب اختر نے اپنے پیغام میں کہا تھا کہ امیت جی جلد صحتیاب ہوں آپ کی جلد صحتیابی کے لیے دعاگو ہوں۔

شعیب اختر کی اس ٹویٹ پر ایک بھارتی ٹوئٹر صارف نے شعیب اختر کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ سرحد پار دہشت گرد رہتے ہیں ہمیں کوئی بھی جلد صحتیابی والی دعا کے پیغامات نہیں چاہئیں

اس پر شعیب اختر نے بھارتی ٹوئٹر صارف کو جواب دیا کہ سننے والی اوپر والے کی ذات ہے کیا پتا کس کی سن لے آپ کے لیبل کرنے سے کوئی لیبل نہیں ہو جاتا۔

شعیب اختر کے اس پیغام سے بھارتی عوام و کرکٹ شائقین کے دل جیت لئے اور انہوں نے شعیب اختر کے اس عمل کو سراہا-

شاہد آفریدی کی ٹویٹ پر بھارتی صارف نے ان کے اس عمل کی تعریف کرتے ہوئے لکھا کہ یہ وہ ذہنیت ہے جو ہمارے ممالک کے مابین نفرت کو ختم کر سکتی ہے۔ معذرت کے ساتھ ، کسی ہندوستانی وزیر نے آپ کی بیماری کے دوران ٹویٹ کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں